Our _Blog_

Our Daily News

لندن کا رہائشی ڈاکٹر شفقت اڑھائی ماہ سے لاپتہ، پاکستان میں اغوا ہوا یا برطانیہ میں، والدین کی بازیابی کے لئے اپیل

British Pakistani national missing on arrival in Dina Jhelum

some image some image

لندن،پوٹھوار ڈاٹ کوم، محمدنصیر راجہ سے۔۔۔۔۔ زمین کھا گئی یا آسمان، دینہ کا رہائشی پاکستانی نژاد برطانوی شہری اڑھائی ماہ سے لاپتہ، والدین کی برطانوی ہائی کمیشن ان پاکستان اور برطانوی وزیر داخلہ سے بازیابی کے لئے اپیل، تفصیلات کے مطابق تحصیل دینہ کے گاوں پنڈ جاٹہ کی رہائشی خاتون صغراٰی بی بی نے صحافیوں کو بتایا کہ وہ برطانوی شہری ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ تئیس اگست کو ان کا بیٹا شفقت حسین ولد لال حسین جو کہ برطانوی شہری ہے اور ڈاکٹر ہے اینفیلڈ، لندن سے لاپتہ ہو گیا۔انھوں نے پولیس سٹیشن میں رپورٹ کی تو تفتیش سے پتہ چلا کہ وہ پاکستان چلا گیا ہے۔جس کے بعد والدہ بھی اس کا پتہ کرنے پاکستان آگئی۔

مگر پاکستان آنے کے بعد انھیں پتہ چلا کہ ان کا بیٹا ان کے آبائی گھر نہیں پہنچا۔ اسلام آباد ائرپورٹ سے معلومات کرنے پر پتہ چلا کہ تو معلوم ہوا کہ وہ اسلام آباد ائرپورٹ سے تئیس اگست کو آوٹ ہوا ہے مگر اس کی واپسی کی کوئی تصدیق نہیں۔ جس سے ظاہر ہوا کہ وہ اسلام آباد ائرپورٹ سے دینہ جاتے ہوئے،گھر کے راستے میں کہیں غائب ہو گیا ہے۔

ڈاکٹر شفقت کی والدہ کے مطابق دو ماہ تکپولیس سٹیشنوں کے دھکے کھانے اور رپورٹ درج کروانے کی کوشش کی مگر کوئی پولیس اسٹیشن مقدمہ درج نہیں کر رہا تھااب تھانہ ائرپورٹ میں مقدمہ درج ہو گیا ہے مگر تاحال ان کے بیٹے کو کوئی سراغ نہیں مل رہا۔ صغرٰی بی بی نے برطانوی ہائی کمیشن اور وزیر داخلہ سے اپنے بیٹے کی بازیابی کی اپیل کی ہے ان کا کہنا ہے کہ ان کا بیٹا سادہ سا نوجوان ہے اس کی کسی کے ساتھ کوئی دشمنی بھی نہیں۔

London; Family has pleaded for whereabouts of Shafqat Hussain after he went missing after arriving at Islamabad airport from London. The family told it has been 10 weeks and we do not know what has happened.

According to Sugra Bibi mother of Shafqat Hussain son of Lal Hussain, who said on 23rd September her son went missing in Enfield, London where they live, after registering report at London police station,

The family were told by police, Shafqat Hussain who is also a Doctor had departed to Islamabad airport to his native village Pind Jatta, Dina in District Jhelum. Sugra Bibi also arrived in Dina and investigated where about of her son.

Islamabad airport authorities told Sugra Bibi that her son did arrive at Islamabad airport and checked out, But Sugra Bibi said he never arrived in his native village and totally disappeared.

The family of Shafqat Hussain persume that Shafqat Hussain was kidnapped on arrival in Pakistan, They have appealed to British High commission and Rawalpindi police to investigate where about of Shafqat Hussain.

سوہاوہ کے قریب بس ڈرائیوروں کی ریس نے ایک فرد کی جان لے لی، دو شدید زخمی

One dead two injured in triple mad bus race in Sohawa, Jhelum

some image

جہلم،سوہاوہ (نمائندہ پوٹھوار ڈاٹ کوم، ظفرغوری )۔۔۔۔جی ٹی روڈ ترکی ٹول پلازہ کے قریب بسوں کی ریس کا نتیجہ 3 موٹر سائیکل سوار شدید زخمی ہوگئے ،زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے ایک نوجوان جاں بحق، دوشدید زخمی،

جی ٹی روڈ سوہاوہ ترکی ٹول پلازہ کے قریب تین بسوں کی آپس میں ریس کے دوران ایک بس نمبری IDP-4055 نے موٹر سائیکل نمبری RIL -2174 کو ٹکر مار دی جس کے نتیجے میں اللہ دتہ ولد محمد پرویز،طیب حسین ولدعابد حسین ،محمد جلال ولدمحمد نصرت شدید زخمی ہوگئے۔حادثے کی اطلاع ملتے ہی ڈی ایس پی سوہاوہ راجہ شاہدنذیر اور ایس ایچ او چوہدری محمد الیاس فوری طور پر موقع پر پہنچ گئے اور زخمیوں کو ریسکیوکروایا ۔

ریسکیو 1122کی ٹیم نے زخمیوں کوفوراََ ٹی ایچ کیو ہسپتال سوہاوہ پہنچایا۔بس ڈرائیور بس سمیت وہاں سے فرار ہوگیا موٹر وے پولیس سوہاوہ کے ڈی ایس پی ندیم گل اور آپریشن آفیسر بلال احمد نے بس کا تعاقب کیا اور دینہ کے قریب سے بس کو جا لیا۔ موٹر وے پولیس کو دیکھتے ہی ڈرائیور موقع سے فرار ہوگیا جبکہ کنڈیکٹر اور ہیلپر کو گرفتار کر کے حوالہ پولیس کردیاگیا۔

زخمیوں میں اللہ دتہ کو ٹانگ پر اور چہرے پر چوٹیںآئیں جبکہ محمد جلال اور طیب حسین کو شدید زخمی ہونے کے باعث ڈی ایچ کیو ہسپتال راولپنڈی ریفر کر دیا گیا۔آخری اطلاعات موصول ہونے پر محمد جلال نامی نوجوان راولپنڈی لیجاتے ہوئے راستے میں ہی دم توڑ گیا۔پولیس تھانہ سوہاوہ نے مقدمہ درج کرکے ضابطے کی کارروائی شروع کردی ہے۔

Sohawa, Jhelum; One Person was killed while two were seriously injured and are fighting for their lives, as three mad bus drivers decided to have a race on GT road, putting public and passengers lives at risk.

According to SHO Sohawa police, Ch Mohammad Ilyas who told pothwar.com, that the incident happened near Taraki toll plaza in Sohawa, where the three bus drivers were racing each other, one of the bus driver then hit a oncoming motorbike,

In the incident three people were being taken to hospital, in which Mohammad Jalal died while on way to hospital, While Allah Ditta and Teayyab Hussain are being treated in the hospital and are in serious condition.

According to the police the bus driver has fled and a police case has been registered. The rescue services were praised for arriving on time and taking the injured to hospital.

ایوان دیوان حضوری میں برطانوی انٹرنیشنل ایمرجنسی ٹیم کے اعزاز میں ظہرانہ

British international emergency team officials given reception at Deewan e Hazoori in Sohawa

some image

سوہاوہ( نمائندہ پوٹھوار ڈاٹ کوم، ظفرغوری)۔۔۔ ۔ ایوان دیوان حضوری میں برطانوی انٹرنیشنل ایمرجنسی ٹیم کے اعزاز میں ظہرانہ،مذہبی، سیاسی، سماجی شخصیات کی شرکت، محفل سماع کا بھی انعقاد کیا گیا، پر تکلف ضیافت سے مہمانوں کی تواضع کی گئی، پاکستان پر امن ملک ہے، یہاں کے لوگ اور کھانے بہت اچھے ہیں ، ایمرجنسی ٹیم کے فائر چیف ڈیرل پال اوپرے کا اظہار خیال، وفد نے مزار دیوان حضوری پر بھی حاضری دی۔

تفصیلات کے مطابق گزشتہ روزصاحبزادہ اخلاق احمد شاہ، صاحبزادہ عرفان احمد شاہ اور صاحبزادہ شہزاد احمد شاہ کی جانب سے ایوان دیوان حضوری میں ریسکیو 1122پنجاب کو تربیت فراہم کرنے کے لئے برطانیہ سے آئی ہوئی انٹرنیشنل ایمرجنسی ٹیم کے اعزاز میں ظہرانہ دیا گیا۔ انٹرنیشنل ایمرجنسی ٹیم کے وفد کے انچارج مہربان صدیق چوہدری کی ہمراہی میں تشریف لائے ہوئے فائر چیف ڈیرل اوپرے، سٹیفن گیسی ودیگرریسکیو اہلکاروں کے اعزاز میں دئیے گئے

ظہرانہ میں آستانہ عالیہ دیوان حضوری کے صاحبزادہ عرفان احمد شاہ( جو کہ کوونٹری برطانیہ میں مقیم ہیں اور انٹرنیشنل ایمرجنسی ٹیم کے ہمراہ خصوصی معاون ومیزبان کی حیثیت سے شامل ہوئے ہیں)کی خصوصی دعوت پرسائیں شعبان فرید(آستانہ عالیہ کلیام شریف)، صاحبزادہ ڈاکٹر خواجہ محمد ثقلین، علامہ قاری عصمت اللہ سیالوی، علامہ صاحبزادہ عثمان غنی،محمد ظریف(ممبر سنسر بورڈ )،راجہ جاوید اقبال (ممبر قانون ساز اسمبلی آزاد کشمیر)،راجہ اختر حسین( ممبر ایگزیکٹو کونسل پی پی پی ضلع راولپنڈی)، ڈاکٹر ظہیر احمد(نائب صدر جہلم چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری)، راجہ سفیر اکبر(چیئرمین یونین کونسل پیل بنے خان)،راجہ تنویر پنوار(سیاسی وسماجی شخصیت)،چوہدری محمد عامر، شیخ طارق (چیف ایگزیکٹو ایڈ مور پٹرول پمپ گوجرخان) سمیت اہلیان علاقہ کی کثیر تعداد بھی مدعو تھی

اس موقع پر لاہور اور جہلم سے ریسکیو اہلکاروں نے بھی خصوصی شرکت کی۔شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے وفد کے انچارج مہربان صدیق چوہدری نے کہا کہ انٹرنیشنل ایمرجنسی ٹیم پاکستان میں ریسکیو 1122اور دیگر ایمرجنسی اداروں کی معاونت اور خصوصی تربیت کے لئے ہمیشہ پیش پیش رہے گی۔ شرکاء سے اظہار خیال کرتے ہوئے فائر چیف ڈیرل اوپرے نے کہا کہ پاکستان آکر ہمیں بہت خوشی ہوئی ہے۔ پاکستان پر امن ملک ہے اور یہاں کے لوگ اور کھانے بہت اچھے ہیں تاہم یہاں کی سڑکوں پر خصوصی توجہ دینے کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہاں کے ایمرجنسی اداروں کے اہلکاروں میں خدمت کا جذبہ بدرجہ اتم پایا جاتا ہے اگر ان کو مناسب تربیت اور بہترین جدید آلات سے لیس کیا جائے تودنیا بھر میں انکے مقابلے کا کوئی ادارہ نہیں۔تقریب کے میزبانوں صاحبزادہ اخلاق احمد شاہ اور صاحبزادہ عرفان احمد شاہ نے انٹرنیشنل ایمرجنسی ٹیم سمیت تمام مہمانوں کا تہہ دل سے شکریہ ادا کیا۔ تقریب کے شرکاء کی لذیذ اور پرتکلف ضیافت سے تواضع کی گئی اور تسکین روح کے لئے محفل سماع کا اہتما م بھی کیا گیا۔ افتخار علی ، واجد علی کلیامی قوال اور ہمنوا نے اپنے مخصوص انداز میں نعتیہ اور عارفانہ کلام پیش کرکے حاضرین کو محظوظ کیا۔تقریب کے بعد انٹرنیشنل ایمرجنسی ٹیم کے وفد نے دربار عالیہ الحاج حافظ پیرسید محمدعبداللہ شاہ المعروف دیوان حضوری ؒ پرعقیدت و احترام کے ساتھ حاضری دی۔

Sohawa, Jhelum; The British emergency team officials were given reception at Deewan e Hazoori in Sohawa, Jhelum, Religious scholars along with social and political personalities were also present.

The British emergency team are training 1122 rescue service in Punjab on the invitation of Saibzada Arfan Ahmed Shah, Saibzada Ikhlaq Ahmed Shah and Saibzada Shezad Ahmed Shah.

The British emergency team in charge Meharban Saddique Ch, Darryl Oprey and Steven Cassey were awarded for their contributions in training the Punjab rescue services.

The Delegation from England visited the Deewan e Hazoori shrine along with rescue services officials from Lahore and Jhelum. Saibzada Arfan Ahmed Shah who had gone from Coventry was praised for arranging the training and holding the reception.

سپیشل چلڈرن جہلم کے بچوں کا ایک اور اعزاز ، ریجنل اتھلیٹکس مقابلوں میں نمایاں کامیابی

Honour for Special needs children from Jhelum at athletic competitions

some image some image

جہلم (نمائندہ پوٹھوار ڈاٹ کوم، امجد بٹ )۔۔۔۔ القاسم انسٹی ٹیوٹ برائے سپیشل چلڈرن جہلم کے بچوں کا ایک اور اعزاز ، ریجنل اتھلیٹکس مقابلوں میں نمایاں کامیابی کے بعد قومی اور بین الاقوامی مقابلوں کے تربیتی کیمپ کیلئے منتخب ،

اسلا م آباد میں ہونے والے ریجنل اتھلیکٹکس مقابلوں القاسم انسٹیٹیوٹ جہلم کے سپیشل بچوں زین نے 100میٹر کی دوڑ میں پہلی ،ابتسام نے دوسری اور عثمان نے 3000میٹر دوڑ اور لانگ جمپ میں دوسری پوزیشن حاصل کی جسکی بنا پر انہیں قومی اوربین الاقوامی کھیلوں کی تیاری کیلئے لگائے جانے والے تربیتی کیمپوں کیلئے منتخب کرلیا گیا ، اس سے قبل بھی القاسم انسٹی جہلم کے سپیشل بچے پاکستانی ٹیم میں شامل ہوکر قومی اور بین الاقومی مقابلوں میں حصہ لے کر سونے اور چاندی کے اعزازات حاصل کرچکے ہیں۔

اسلام آباد میں ہونے والے ان ریجنل مقابلوں میں جہلم ،میر پورگوجر خان ، اسلا م آباد،راولپنڈی اور واہ کینٹ کی ٹیموں نے حصہ لیا تھا ۔ القاسم انسٹی ٹیوٹ جہلم کے ایڈمنسٹریٹر ڈاکٹر محمد رشید ، صدر اصغر ملک ، سینئر نائب صدر طارق محمود بٹ ، نائب صدر صوبیدار ریاض ،جنرل سیکرٹری عمر بٹ، سیکرٹری مالیات ملک عرفان نے بچوں کی اس نمایاں کامیابی کو اساتذہ کی محنت اور لگن کی مرہون منت قرار دیتے ہوئے کہا

سپیشل بچوں کی بہترین ذہنی اور جسمانی تربیت کی بدولت ہی القاسم انسٹیٹیوٹ کے بچے ملک اور بین الاقوامی سطح پر نمایاں کارکردگی کا مظاہرہ کرکے پاکستان اور جہلم کے افتخار کا باعث بنتے ہیں ۔شہر کی متعدد سماجی تنظیموں نے بھی اس کارکردگی کو قابل تحسین قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ یہ اعزاز ضلع بھر میں صرف القاسم انسٹی ٹیوٹ کو ہی ہمیشہ حاصل رہا ہے۔

Jhelum; Another honour for the children of Qasim Institute of Special Education Jhelum, after the successful success in regional athletic competitions, They have been selected for national and international competing training camps.

In Islamabad where regional athletic competition, Mohammad Zain of Qasim Institute of Special Education Jhelum won 100 meters race, While Ibtisaam also from same school was second in the same race. Mohammad Usman was victorious in 3,000 meter race.

Already in the past also, Qasim's special need children, have won gold and silver by participating in the national and international competitions and are likely to repeat once more.

Qasim Institute of Special Education Jhelum have been praised for their hard work and contributions and are called as pride of Jhelum.

Pothwar. COM

+44 7763249391 | pothwar@yahoo.co.uk
© Copyright Pothwar.com | Est. 2000-2017

new graphics